ٹریڈ اینڈ انڈسٹری
تازہ ترین

ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنے کےکیلئے تاجر برادری حکومت کا بھرپور ساتھ دے گی، میاں زاہد حسین

بیرون ملک پاکستانیوں کو پاکستان میں سرمایہ کاری کے لئے بانڈز اور سکوک کا فوری اجراء کیا جائے

کراچی: پاکستان بزنس مین اینڈ انٹلیکچولز فور م وآل کراچی انڈسٹریل الائنس کے صدر ،بزنس مین پینل کے سینئر وائس چیرمین اور سابق صوبائی وزیر میاں زاہد حسین نے کہا ہے کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار اقتصادی کونسل کی سربراہی وزیراعظم خود کررہے ہیں جو عمران خان کی ملک کو درپیش اقتصادی چیلینجز کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کی خواہش کا مظہر ہے۔

اکنامک ایڈوائزری کونسل کے پلیٹ فارم سے نامور معاشی ماہرین کی سفارشات کے مطابق ملک کی معاشی صورتحال کو بہتر کرنے کے لئے اقدامات کئے جائینگے۔ معاشی مشاورتی کونسل میں اقتصادی اور معاشی شعبوں میں اعلیٰ تعلیم اور تجربہ کے حامل ہیں، کونسل کے 18ممبران میں سے 11کا تعلق نجی شعبہ سے ہے۔ میاں زاہد حسین نے کہا کہ اکنامک ایڈوائزری کونسل کے قیام سے کاروباری حلقوں میں توقع کی جارہی ہے کہ یہ کونسل کاروبار، تجارت، صنعت ، افرادی قوت اور تمام متعلقہ شعبوں میں فوری ، موثر اور دیر پا پالیسیوں کی سفار شات تیار کرے گی اورحکومت ان سفارشات کی روشنی میں انقلابی اقدامات کرے گی۔

میاں زاہد حسین نے کہا ہے کہ برآمدات میں اضافہ، صنعتوں کی ترقی، روپے کی قدر میں استحکام اور بیرونی سرمایہ کاری کے لئے معاون ماحول پیدا کرنے کے لئے بھی فوری اقدامات کئے جائینگے۔پاکستان میں زرمبادلہ کے ذخائر خطرناک حد تک کمی کا شکار ہیں،وزیراعظم عمران خان کے اعلان کے مطابق بیرون ملک پاکستانیوں کو پاکستان میں سرمایہ کاری کے لئے بانڈز اور سکوک کا فوری اجراء کیا جائے تاکہ زرمبادلہ کے ذخائر پر بڑھتا ہوا دباؤ قابو میں آسکے۔ جولائی میں 1.65ارب ڈالر کی برآمدات ہوئیں جو پچھلے مہینے سے 1.16فیصد زیادہ تھیں دوسری جانب درآمدات 0.1فیصد اضافہ سے 4.84ارب ڈالر رہیں جس کے نتیجے میں پاکستان کو جولائی 2018کے دوران3ارب ڈالر سے زیادہ کا تجارتی خسارہ ہوا۔

میاں زاہد حسین نے کہا ہے کہ وزارت خزانہ اور اکنامک ایڈوائزری کونسل کے ممبران ملک کی اس دگرگوں معاشی صورتحال میں اپنی صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے فوری فیصلے کریں اورپاکستان کو معاشی اور اقتصادی طور پر مضبوط کرنے کے لئے ہر ممکن کوشش کریں۔ اس کونسل کی سفارشات اور تجاویز کے فوری نفاذ کے لئے متعلقہ اداروں اور وزارتوں کو فوری اقدامات کی ضرورت ہوگی تاکہ معاشی مضبوطی کی طرف اہم پیش رفت ہوسکے اور اس کونسل کی کارکردگی صرف سفارشات اور تجاویز تک محدود نہ ہو بلکہ عملی اقدامات کی صورت میں معاشی فوائد کی صورت میں بہتر نتائج حاصل کرنے کے لئے حکمت عملی بھی تیار کرنے کی ضرورت ہوگی۔

ٹیگس

Zubair Yaqoob

The author has diversified experience in business reporting. He is senior editor at www.pkrevenue.com. He can be reached at [email protected]

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Alert: Content is protected !!
Close