ٹریڈ اینڈ انڈسٹریسیکٹورل
تازہ ترین

عوام اب پیدل چلیں گے، پی ٹی آئی حکومت کا مہنگائی پیکج تیار

سی این جی کی فی کلو قیمت میں بیک وقت 21 روپے کا اضافہ ہوگا، پبلک ٹرانسپورٹ، اسکول وینیں اور لاکھوں گاڑیوں کے مالکان متاثر ہونگے

کراچی: پی ٹی آئی حکومت کے ہر دل عزیز وزیر خزانہ نے بلا آخر گیس ٹیرف میں اضافے کا فرمان جاری کردیا۔ وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ گیس ٹیرف میں اضافے کے منفی اثرات عوام پر مرتب نہیں ہونگے۔ لیکن اپنے منشور کا دم بھرنے والی پی ٹی آئی حکومت نے اس فیصلے کے مضر اثرات کا بغور جائزہ نہیں لیا جس کے ہولناک اثرات سی این جی شعبے کے گرد منڈلاتے نظر آرہے ہیں۔ گیس ٹیرف میں حکومت کے اعلان کردہ اضافے کے نتیجے میں اب ایک کلو سی این جی 21 روپے مہنگی ہوجائے گی۔ گیس ٹیرف میں اضافے اور نوٹی فیکیشن سے قبل ریٹیل میں فی کلو سی این جی 82 روپے پر دستیاب ہے جو وزیر خزانہ کے احکامات کے بعد فی کلو 102 روپے یا پھر 103 روپے فی کلو ہوگی۔

آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے مرکزی سینئر نائب چیرمین سمیر نجم الحسن نے اپنا ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت نے گیس کی قیمتوں میں اضافہ کرکے غریب عوام کی کمر پر مہنگائی کی کیل ٹھونک دی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ فیصلے سے قبل گیس کی قیمت 82 روپے فی کلو تھی۔

سمیر نجم الحسن کا کہنا ہے کہ اسد عمر نے کونسے اعداد و شمار اکھٹے کئے، سمجھ سے بالا تر ہیں، ماضی کی حکومتوں نے بھی گیس ٹیرف میں بیک وقت اتنا اضافہ نہیں کیا۔ آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے مرکزی سینئر نائب چیرمین نے کہا کہ ملک بھر میں پبلک ٹرانسپورٹ، اسکول وینیں اور ستر فیصد نجی استعمال کی گاڑیاں سی این جی پر چل رہی ہیں اور اس کا براہ راست اثر غریب عوام پر پڑے گا۔ سمیر نجم الحسن نے کہا کہ گیس ٹیرف بڑھاتے ہوئے عوام کو اعداد و شمار کے گورکھ دھندے میں الجھا کر سی این جی مہنگی اور پیٹرول کو سستا ظاہر کیا جارہا ہے تاکہ ماضی میں پیٹرولیم مصنوعات پر لیوی کو برقرار رکھتے ہوئے اس جانب سے توجہ ہتائی جائے۔ سمیر نجم الحسن نے کہا کہ گیس ٹیرف کے لئے وزیر خزانہ کا سندھ پنجاب اور کے پی کا موازنہ سراسر غلط ہے، جس صوبے میں گیس کے ذخائر ہیں انہیں معاہدے کے تحت سستی گیس فراہم کی جاتی ہے۔

آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے مرکزی نائب چیرمین نے کہا ہے کہ انتخابات سے قبل عوام کے مفاد کا دم بھرنے والی پی ٹی آئی اپنے منشور سے منحرف ہورہی ہے۔ انہوں نے وفاقی وزیر خزانہ سے سوال کیا ہے کہ ملک کے معاشی حالات کا خمیازہ کروڑوں عوام کیوں بھگتیں؟۔ سمیر نجم الحسن نے کہا ہے کہ سی این جی شعبے پر نجی شعبے کی اربوں روپے کی سرمایہ کاری تباہ کرنے کی اجازت نہیں دینگے، اس سلسلے میں قانونی راستہ اپنائیں گے۔

آل پاکستان سی این جی ایسو سی ایشن کے رہنماء سمیر نجم الحسن نے وزیر اعظم عمران خان سے اپیل کی ہے کہ گیس ٹیرف کے منفی اثرات کا عوامی جائزہ لے کر اس فیصلے کو فوری واپس لیا جائے۔

ٹیگس

Zubair Yaqoob

The author has diversified experience in business reporting. He is senior editor at www.pkrevenue.com. He can be reached at [email protected]

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Alert: Content is protected !!
Close