سیکٹورل
تازہ ترین

پاکستان پربیرونی قرضوں کا دباؤ، روپے کی گراوٹ پر اقوام متحدہ کے ذیلی ادارے کے تحفظات

کراچی: اقوام متحدہ کے ذیلی ادارے یونائیٹڈ نیشنز کانفرنس فار ٹریڈ اینڈڈیویلپمنٹ ( یو این سی ٹی اے ڈی) نے بیرونی قرضوں کے حجم اورروپے کی قدر میں گراوٹ کے نتیجے میں پاکستان کی معیشت کو بڑھتے ہوئے خطرات پر تحفظات کا اظہار کیا ہے۔

یونائیٹڈ نیشنز کانفرنس فار ٹریڈ اینڈڈیویلپمنٹ ( یو این سی ٹی اے ڈی)کی سالانہ رپورٹ برائے سال 2018 کے مطابق پاکستان کے بیرونی قرضے 91 ارب ڈالر ہوگئے ہیں جو جی ڈی پی کا 31 فیصد ہےاقوام متحدہ کے ذیلی ادارے کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان کی معاشی شرح نمو میں اضافے کے باعث روپے کی شرح میں ایک چوتھائی کمی ریکارڈ کی گئی ہے جبکہ خال تیل کی عالمی قیمتوں کی وجہ سے تجارتی خسارے کے بوجھ میں اضافہ اور زرمبادلہ کے ذخائر میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے۔

اقوام متحدہ کے ذیلی ادارے یونائیٹڈ نیشنز کانفرنس فار ٹریڈ اینڈڈیویلپمنٹ ( یو این سی ٹی اے ڈی) کی سالانہ جائزہ رپورٹ میں تجاویز دی گئی ہیں کہ خسارے اور قرض کے بوجھ میں کمی کےلئے بچت کے اقدامات کرنا ہونگے۔ یع این سی ٹی اے ڈی کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ” یہ دیکھنا ہوگا کہ بڑے منصوبوں سے برآمدات کس حد تک بڑھ سکتی ہیں۔

ٹیگس

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Alert: Content is protected !!
Close