اسٹاک اینڈ کوموڈیٹیز
تازہ ترین

کاروباری ہفتے کے آغاز پر اسٹاک مارکیٹ میں 1328 پوائنٹس کی نمایاں کمی

آئی ایم ایف بیل آوٹ، وزیر اعظم کے اعلان، ایف اے ٹی ایف کے وفد کی آمد اور معاشی صورتحال پر بازار حصص میں غیر یقینی کیفیت چھائی رہی

کراچی: کاروباری ہفتے کے آغاز پر پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں شدید مندی کا رجحان رہا آئی ایم ایف سے بیل آؤٹ پیکیج کی اطلاعات، وزیر اعظم کی جانب سے کرپٹ عناصر کے خلاف کڑے احتساب اور مجموعی معاشی صورتحال کے نتیجے میں کے ایس ای ہنڈرڈ انڈیکس میں 1328 پوائنٹس کی کمی کے ساتھ کاروبار 37898 کی سطح پر بند ہوا۔

پیر کے روز کاروباری سیشن کے دوران 18 کروڑ 60 لاکھ شیئرس کی خرید و فروخت ہوئی جبکہ سرمایہ کاری حجم 6 ارب 30 کروڑروپے رہا۔
عارف حبیب لمیٹڈ کے مطابق مارکیٹ میں آئی ایم ایف کے بیل آؤٹ پیکیج، وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے کرپٹ عناصر کے خلاف کڑے احتساب، ملک کی مجموعی سیاسی اور معاشی صورتحال پر غیر یقینی کیفیت طاری رہی۔ گزشتہ ہفتے کی مندی کا تسلسل کاروباری ہفتے کے آغاز پر جاری رہا۔

پیر کے روز بینکاری، ٹیکنالوجی، سیمنٹ، کیمیکلز، پاور جنریشن، انجینئرنگ، ٹیکسٹائل کمپوزٹ کے شعبوں میں حصص کی فروخت کا دباؤ ریکارڈ کیا گیا۔

تجزیہ کاروں نے چھوٹے سرمایہ کاروں کی محتاط رویہ اپنانے کا مشورہ دیا ہے۔ تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ فنانشل ٹاسک فورس کے وفد کی آمد اور ان کی سفارشات کے حوالے سے بھی مارکیٹ میں بے چینی پائی جارہی ہے۔

مارکیٹ کی صورتحال پر معاشی ماہرین کا کہنا ہےکہ آئی ایم ایف کے تجزیہ پر مارکیٹ میں تشویش ہے، آئی ایم ایف کے اہداف پورا کرنا مہنگائی کا سبب ہوگا ان کاکہنا ہے کہ اسٹاک ایکسچینج میں مندی کا رجحان غیر مستحکم سیاسی صورتحال کی وجہ سے بھی ہے

ٹیگس

Zubair Yaqoob

The author has diversified experience in business reporting. He is senior editor at www.pkrevenue.com. He can be reached at [email protected]

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Alert: Content is protected !!
Close