اسٹاک اینڈ کوموڈیٹیز

آئی ایم ایف کی شرائط پر تحفظات، کاروباری ہفتے کے آغاز پر بازار حصص شدید مندی کی لپیٹ میں رہا

کے ایس ای 100 انڈیکس میں 750 پوائنٹس کی کمی سے کاروبار 36767 کی سطح پر بند ہوا

کراچی: کاروباری ہفتے کے آٖغاز پر پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں 750 پوائنٹس کی کمی، 100 انڈیکس 36 ہزار 767 پوائنٹس کی سطح پر بند، سرمایہ کاروں کے 9 ارب روپے ڈوب گئے۔

گزشتہ دو ماہ کے دوران پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں مجموعی مندی کا تسلسل غالب رہا ہے دوسری جانب اسٹینڈرڈ اینڈ پوور 500 انڈیکس پر بھی پاکستانی کمپنیوں کے انخلاء کے خدشات ظاہر کئے جارہے ہیں۔

پیر کے روز پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں 16 کروڑ 55 لاکھ حصص کی خرید و فروخت ہوئی جبکہ سرمایہ کاری حجم 6 ارب 8کروڑ روپے رہا۔

کاروباری ہفتے کے پہلے روز ٹیکنالوجی، بینکاری، کیمیکلز، سیمنٹ، توانائی اور الائیڈ انڈسٹری کے شعبوں میں حصص کی خرید و فروخت ریکارڈ کی گئی۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ ایف اے ٹی ایف کی سفارشات کا دباؤ، آئی ایم ایف پروگرام میں جانے سے پاکستان کو کڑی سرائط کا سامنا ہوسکتا ہے، جس میں بجلی و گیس کی قیمتوں، شرح سود اور محصولات میں اضافے سے اقدامات شامل ہیں۔ ان عوامل کے نتیجے میں پاکستان کے معاشی بیرو میٹر پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر مندی کے بادل منڈلارہے ہیں۔

تجزیہ کاروں نے چھوٹے سرمایہ کاروں کو محتاط رہے کا مشورہ دیا ہے۔

ٹیگس

Zubair Yaqoob

The author has diversified experience in business reporting. He is senior editor at www.pkrevenue.com. He can be reached at [email protected]

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Alert: Content is protected !!
Close